بلیک ہول کے گرد سیاروں کے گردش کرنے کا انکشاف

محقیقن کے مطابق جس طرح ایک نظامِ شمسی میں مختلف سیارے ایک ستارے کے گرد گردش کرتے ہیں بالکل اسی طرح ایک بلیک ہول کے گرد بھی یہ گردش کر سکتے ہیں۔ خلاء میں موجود غبار جب اکھٹا ہو کر ایک ستارے کے گرد گردش کرتا ہے تو اِسے ہم سیارے کا نام دیتے ہیں۔ بالکل اسی طرح اب پتا چلا ہے کہ سیارے بلیک ہول کے گرد بھی گردش کر سکتے ہیں۔ اور اس بات کی ریاضیاتی تصدیق بھی ہوچکی ہے۔

زمین سے دس گُنا بھاری یہ وجود کسی بھی بلیک ہول سے دس نوری سال کے فاصلے پہ موجود ہوسکتے ہیں۔ یاد رہے بلیک ہول کی کشش اتنی زیادہ ہوتی ہے کہ یہ ہر چیز کو اپنے اندر کھینچ لیتا ہے۔ اور ایک بلیک ہول کا ماس سورج سے ایک لاکھ گُنا زیادہ ہو سکتا ہے۔

چونکہ بلیک نزدیکی بلیک ہول بھی بہت دور ہے ایسے میں اس بات کا عملی ثبوت کچھ عرصے بعد ہی مل سکے گا۔

محفل قدرت ہے اک دریائے بے پایان حسن

آنکھ اگر دیکھے تو ہر قطرے میں ہے طوفان حسن

ضیغم قدیر

شیئر کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں